مرے مردہ دل میں تلاطم بپا ہے

Zunaira_Gul

Senior Member
مرے مردہ دل میں تلاطم بپا ہے
کچھ ایسا ہوا ہے جو سب سے جدا ہے
زمیں کے خزانوں سے مطلب نہیں ہے
یہ دل میرا دنیا سے اکتا چکاہے
نہ جانے سفر میرا کب ختم ہوگا
مجھے ہر قدم پر ہی دھوکا ہوا ہے
ستم یہ زمانے کے کم تو نہیں تھے
اب اک اور میرا خریدا ہوا ہے
وہ غائب ہے گل سے نظر کی حدوں تک
گلستان اب بھی مہکتا رہا ہے


زنیرہ گل


 
Top