ہم غزل میں ترا چرچا نہیں ہونے دیتے

intelligent086

Super Star
Nov 10, 2010
10,280
10,547
1,313
Lahore,Pakistan


ہم غزل میں ترا چرچا نہیں ہونے دیتے

تیری یادوں کو بھی رُسوا نہیں ہونے دیتے

کچھ تو ہم خود بھی نہیں چاہتے شہرت اپنی

اور کچھ لوگ بھی ایسا نہیں ہونے دیتے

عظمتیں اپنے چراغوں کی بچانے کے لیے

ہم کسی گھر میں اُجالا نہیں ہونے دیتے

آج بھی گائوں میں کچھ کچے مکانوں والے

گھر میں ہمسائے کے فاقہ نہیں ہونے دیتے

ذکر کرتے ہیں ترا نام نہیں لیتے ہیں

ہم سمندر کو جزیرہ نہیں ہونے دیتے

مجھ کو تھکنے نہیں دیتا یہ ضرورت کا پہاڑ

میرے بچے مجھے بوڑھا نہیں ہونے دیتے


معراج فیض آبادی
 

shehr-e-tanhayi

ایسی محبت کیا کرنی جو نیند چرا لے آنکھوں سے
Co Manager
Jul 20, 2015
36,751
11,477
713
Khoobsorat intkhaab
 

Angela

~LONELINESS FOREVER~
TM Star
Apr 29, 2019
3,713
4,107
213
~Dasht e Tanhaayi~


ہم غزل میں ترا چرچا نہیں ہونے دیتے

تیری یادوں کو بھی رُسوا نہیں ہونے دیتے

کچھ تو ہم خود بھی نہیں چاہتے شہرت اپنی

اور کچھ لوگ بھی ایسا نہیں ہونے دیتے

عظمتیں اپنے چراغوں کی بچانے کے لیے

ہم کسی گھر میں اُجالا نہیں ہونے دیتے

آج بھی گائوں میں کچھ کچے مکانوں والے

گھر میں ہمسائے کے فاقہ نہیں ہونے دیتے

ذکر کرتے ہیں ترا نام نہیں لیتے ہیں

ہم سمندر کو جزیرہ نہیں ہونے دیتے

مجھ کو تھکنے نہیں دیتا یہ ضرورت کا پہاڑ

میرے بچے مجھے بوڑھا نہیں ہونے دیتے


معراج فیض آبادی
Bhtttttt hi umdaaa
 
Top
Forgot your password?