ورلڈ کپ 2019 انگلینڈ

Zunaira_Gul

*GUL*
TM Star
May 16, 2017
2,476
1,655
363
پاکستان کی ورلڈ کپ میں پہلی فتح، انگلینڈ کو 14رنز سے شکست
03 جون 2019



محمد حفیظ نے عمدہ بیٹنگ کے بعد انگلش کپتان آئن مورگن کی اہم وکٹ بھی حاصل کی— فوٹو: اے پی
محمد حفیظ نے عمدہ بیٹنگ کے بعد انگلش کپتان آئن مورگن کی اہم وکٹ بھی حاصل کی— فوٹو: اے پی
پاکستان نے ورلڈ کپ میں اپنے دوسرے میچ میں جوز بٹلر اور جو روٹ کی سنچریوں کے باوجود انگلینڈ کو 14رنز سے شکست دے دی۔
ناٹنگھم کے ٹرینٹ برج میں کھیلے گئے میچ میں انگلینڈ کے کپتان آئن مورگن نے ٹاس جیت کر پاکستان کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی۔

انگلینڈ کی دعوت پر پاکستان بلے بازوں نے محتاط انداز میں بیٹنگ کی اور ٹیم کو اچھا آغاز فراہم کیا، لیکن 82 کے مجموعے پر اسپنر معین علی نے 36 رنز بنانے والے فخر زمان کو اسٹمپ آؤٹ کردیا۔
بابر اعظم اور امام الحق نے ٹیم کی سنچری مکمل کرائی تاہم 111 کے مجموعے پر 44 رنز بنانے والے امام الحق بھی معین علی کی گیند پر آؤٹ ہوکر پویلین لوٹ گئے۔
بابر اعظم اور محمد حفیظ نے ٹیم کو 88 رنز کی پارٹنر شپ فراہم کی اور 199 کے مجموعے پر بڑا شاٹ کھلیتے ہوئے بابر اعظم 63 رنز بنانے کے بعد کیچ آؤٹ ہوگئے۔
اس کے بعد حفیظ کا ساتھ دینے کپتان سرفراز احمد آئے اور دونوں کھلاڑیوں نے جارحانہ بیٹنگ کرتے ہوئے 59 گیندوں پر 80رنز کی شراکت قائم کی۔

حفیظ 62 گیندوں پر 84رنز کی شاندار اننگز کھیلنے کے بعد پویلین لوٹے جبکہ آصف علی کی اننگز 14رنز پر تمام ہوئی۔
کپتان سرفراز احمد نے 44 گیندوں پر 55 رنز کی اننگز کھیلی اور کرس ووکس کی گیند پر انہی کو کیچ دے کر چلتے بنے جبکہ وہاب ریاض کی اننگز ایک چوکے تک محدود رہی۔
شعیب ملک بھی کچھ خاص کارکردگی نہ دکھا سکے لیکن اختتامی اوورز میں حسن علی نے چند جارحانہ شاٹس کھیل پاکستان کو 348رنز کے مجموعے تک رسائی دلائی۔
پاکستان نے مقررہ اوورز میں 8وکٹوں کے نقصان پر 348رنز بنائے۔
انگلینڈ کی جانب سے معین علی اور کرس ووکس نے تین، تین جبکہ مارک وڈ نے دو وکٹیں لیں۔
انگلینڈ نے ہدف کا تعاقب شروع کیا تو تیسرے ہی اوور میں جیسن روئے سوئپ کھیلنے کی کوشش میں شاداب کی گیند پر ایل بی ڈبلیو قرار پائے جبکہ ساتھ ساتھ ریویو بھی ضائع کردیا۔
نئے بلے باز جو روٹ نے جونی بیئراسٹو کے ساتھ مل کر اسکور کو 60تک پہنچایا لیکن اسی مرحلے پر وہاب کی گیند پر اوپننگ بلے باز 32رنز بنانے کے بعد پویلین لوٹے۔
اسکور 85تک پہنچا ہی تھا کہ محمد حفیظ نے قیمتی وکٹ حاصل کرتے ہوئے انگلش کپتان آئن مورگن کی اننگز کا خاتمہ کردیا۔
بین اسٹوکس اور روٹ نے ٹیم کی سنچری مکمل کرائی لیکن گزشتہ میچ کے مین آف دی میچ کی اننگز تین رنز سے آگے نہ بڑھ سکی اور وہ صرف تین رنز بنا کر شعیب ملک کو وکٹ دے بیٹھے۔
118 رنز پر 4وکٹیں گرنے کے بعد روٹ کا ساتھ دینے بٹلر آئے اور دونوں کھلاڑی عمدہ بیٹنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے ابتدائی نقصان کا ازالہ کردیا جبکہ اس دوران انگلینڈ کا رن ریٹ بھی 6 سے کم نہ ہونے دیا۔
روٹ اور بٹلر 130رنز کی شاندار شراکت قائم کر کے انگلینڈ کو میچ میں واپس لے آئے اور جو روٹ نے شاندار سنچری اسکور کی تاہم سنچری کے فوراً بعد وہ شاداب خان کی وکٹ بن گئے، انہوں نے 107رنز بنائے۔
لیکن دوسرے اینڈ سے جوز بٹلر نے جارحانہ بیٹنگ جاری رکھی اور بہترین بیٹنگ کرتے ہوئے محمد عامر کو چوکا لگا کر اپنی سنچری مکمل کی لیکن اگلی گیند پر اسی کوشش میں وہ وہاب ریاض کو کیچ دے بیٹھے، انہوں نے 2 چھکوں اور 9چوکوں کی مدد سے 103رنز بنائے۔


کرس ووکس اور معین علی نے کچھ جارحانہ شاٹس کھیلے لیکن وہاب ریاض نے یکے بعد دیگرے کو آؤٹ کر کے پاکستان کی فتح کے امکانات روشن کر دیے۔
اگلے ہی اوور میں جوفرا آرچر بھی عامر کی گیند پر وہاب کو کیچ دے کر چلتے بنے۔
انگلینڈ کی ٹیم مقررہ اوورز میں 9وکٹوں کے نقصان پر 334رنز بنا سکی اور پاکستان نے میچ میں 14رنز سے فتح اپنے نام کر لی۔
پاکستان کی جانب سے وہاب ریاض نے تین وکٹیں حاصل کیں جبکہ شاداب خان اور محمد عامر کے حصے میں دو، دو وکٹیں آئیں۔
محمد حفیظ کو عمدہ کارکردگی پر مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔
میچ کے لیے دونوں ٹیمیں نے ان کھلاڑیوں پر مشتمل تھیں۔
پاکستان: سرفراز احمد(کپتان)، امام الحق، فخرزمان، بابر اعظم، محمد حفیظ، شعیب ملک، آصف علی، حسن علی، شاداب خان، محمد عامر اور وہاب ریاض۔
انگلینڈ: آئن مورگن(کپتان)، جونی بیئراسٹو، جیسن رائے، جو روٹ، جوز بٹلر، بین اسٹوکس، معین علی، جوفرا آرچر، کرس ووکس، مارک ووڈ اور عادل رشید۔
 

Zunaira_Gul

*GUL*
TM Star
May 16, 2017
2,476
1,655
363
انگلینڈ کیخلاف جیت قوم کیلئے عید کا تحفہ ہے، سرفراز احمد




کریڈٹ کسی ایک کو نہیں پوری ٹیم کو جاتا ہے،
اسی جذبے کو ٹورنامنٹ میں قائم رکھنا چاہتے ہیں، کپتان قومی کرکٹ ٹیم— فوٹو: فائل

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کا کہنا ہے کہ انگلینڈ کی جیت کا کریڈٹ کسی ایک کو نہیں پوری ٹیم کو جاتا ہے اور ٹیم نے قوم کو عید سے قبل تحفہ دیا ہے۔ ٹورنامنٹ میں مزید بہتر کارکردگی دکھائیں گے۔
میچ کے بعد سرفراز احمد نے کہا کہ اچھی اوپننگ شراکت نے ہماری جیت کی بنیاد رکھی۔اس کے بعد محمد حفیظ ،بابر اعظم اور بولروں نے ہمیں جیت پر گامزن کیا۔
سرفراز احمد نے کہا کہ کسی بھی ٹیم کی اچھی کارکردگی میں فیلڈنگ کا کردار اہم ہوتا ہے ۔انگلینڈ کی ون ڈے سیریز میں ہم نے خراب فیلڈنگ کی تھی اللہ کا شکر ہے کہ گیارہ مسلسل میچ ہارنے کے بعد ہم نے اچھی کارکردگی دکھائی اور اسی جذبے کو ٹورنامنٹ میں قائم رکھنا چاہتے ہیں۔

انگلینڈ کے کپتان اوئن مورگن نے کہا کہ پاکستان بہت اچھا کھیلا لیکن ہم اس میچ کے اچھی اور مثبت چیزوں کے ساتھ بنگلہ دیش کے میچ میں جائیں گے۔

مین آف دی میچ محمد حفیظ کا کہنا ہے کہ ہمیں ایک جیت کی ضرورت تھی۔ہم انگلینڈ آئے تھے تو اچھا کھیلنے کے باوجود ہار رہے تھے۔کل ہم نے پریکٹس کے بعد میٹنگ کی اور سب کو یہی بتا یا گیا کہ ہم کسی بھی ٹیم کو ہرانے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ہم جو نتائج دے رہے تھے ہماری ٹیم اس سے کہیں بہتر تھی۔
 

Zunaira_Gul

*GUL*
TM Star
May 16, 2017
2,476
1,655
363
بارش نے انڈیا اور نیوزی لینڈ کو ایک ایک پوائنٹ دلوادیا
 

Zunaira_Gul

*GUL*
TM Star
May 16, 2017
2,476
1,655
363
ورلڈکپ: انگلینڈ کی ویسٹ انڈیز کے خلاف ٹاس جیت کر فیلڈنگ

انگلینڈ کی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی ویسٹ انڈیز میں 3 تبدیلیاں کی گئیں۔ — ورلڈکپ ٹوئٹر اکاؤنٹ

ٹاپ 4 میں شامل ہونے کے لیے ویسٹ انڈیز اور انگلینڈ کی ٹیمیں مد مقابل ہیں جہاں میزبان ٹیم نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

ساؤتھمپٹن میں کھیلے جارہی اس میچ میں انگلینڈ کی ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی جبکہ ویسٹ انڈیز کی ٹیم میں 3 تبدیلیاں کی گئی ہیں۔

ویسٹ انڈیز کی ٹیم میں ایک مرتبہ پھر آندرے رسل، شیرن گیبریل اور ایون لوئس کی واپسی ہوئی۔

دونوں ٹیمیں ورلڈکپ جیتنے کی صلاحیت رکھتی ہیں اور دونوں کو ہی جارح مزاج بلے بازوں کی خدمات حاصل ہیں۔

ورلڈکپ سے قبل آئرلینڈ میں ہونے والی سہ فریقی سیریز کے فائنل میں بلاشبہ ویسٹ انڈیز کو بنگلہ دیش سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا، تاہم ورلڈکپ میں اپنے پہلے میچ میں اس نے پاکستان ٹیم کو آؤٹ کلاس کرتے ہوئے 7 وکٹوں سے باآسانی شکست دے دی تھی۔

ویسٹ انڈیز کو آسٹریلیا کے خلاف شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا جبکہ جنوبی افریقہ کے خلاف ہونے والا اس کا گروپ میچ بارش کی نذر ہوگیا تھا۔

دوسری جانب انگلینڈ نے اب تک ایونٹ میں 3 میچز کھیلے ہیں جس میں اس نے 2 میں کامیابی حاصل کی جبکہ ایک میں اسے پاکستان کے ہاتھوں سنسنی خیز مقابلے کے بعد 14 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

[IMG]
 

Zunaira_Gul

*GUL*
TM Star
May 16, 2017
2,476
1,655
363

'پاکستان کو ورلڈ کپ میں رہنے کیلئے بھارت کے خلاف جیتنا ہوگا'
113870



قومی ٹیم کے سابق کپتان وقار یونس نے کہا ہے کہ آسٹریلیا کے خلاف میچ میں شکست کے بعد بھارت کے خلاف مقابلے میں فتح کے لیے پاکستان کی ٹیم کو اپنا بہترین کھیل پیش کرنا ہوگا۔

پاکستان کو بدھ کو آسٹریلیا کے خلاف ٹونٹن میں کھیلے گئے میچ میں 41 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا، قومی ٹیم پوائنٹس ٹیبل پر آٹھویں نمبر پر موجود ہے اور سیمی فائنل میں رسائی کے لیے اب پاکستانی ٹیم کو کم و بیش ہر میچ میں کامیابی درکار ہے۔

وقار یونس نے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کے لیے لکھے گئے کالم میں اپنا نقطہ نظر پیش کرتے ہوئے لکھا کہ جب بھی پاکستان بھارت سے کھیلتا ہے تو وہ بہت بڑا میچ ہوتا ہے لیکن اتوار کو ہونے والا میچ ورلڈکپ میں دونوں ٹیموں کے درمیان کھیلے گئے میچز کے مقابلے میں پاکستانی ٹیم کے لیے بہت زیادہ اہمیت اختیار کرگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اگر پاکستان کو ٹورنامنٹ میں رہنا ہے تو انہیں اپنی 'اے پلس' پرفارمنس دے کر میچ جیتنا ہوگا، یہ میچ دونوں ٹیموں کے لیے بہت اہمیت رکھتا ہے جسے اربوں کی تعداد میں شائقین دیکھ رہے ہوتے ہیں۔

ورلڈ کپ میں پاکستانی ٹیم کا بھارت کے خلاف ریکارڈ سب سے بدتر ہے اور اسے عالمی کپ کے تمام 6 مقابلوں میں روایتی حریف کے ہاتھوں شکست ہوئی لیکن وقار یونس کا ماننا ہے کہ وہ میچز ماضی کا حصہ بن چکے ہیں۔

انہوں نے لکھا کہ پاکستان کا ریکارڈ ملا جلا ہے اور وہ سب تاریخ کا حصہ بن چکا ہے، یہ ایک نیا میچ ہوگا۔

سابق کپتان نے آسٹریلیا کے خلاف 30 رنز کے عوض 5 وکٹیں لینے والے محمد عامر کی باؤلنگ کو سراہتے ہوئے کہا کہ انہیں دوسرے اینڈ سے سپورٹ نہیں مل رہی، انہوں نے نئی گیند سے بھی اچھی کارکردگی دکھائی اور اپنی تمام تر ورائٹی سے باؤلنگ کی۔

انہوں نے کہا کہ ہم سب جانتے ہیں عامر ذہنی طور پر بہت مضبوط ہیں اور انہوں نے ثابت کیا کہ فارم آنی جانی چیز ہے لیکن کلاس ہمیشہ رہتی ہے، اس میں کوئی شک نہیں وہ ایک میچ ونر ہیں۔

یاد رہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان ورلڈکپ کے گروپ اسٹیج کا میچ 16 جون کو مانچسٹر کے اولڈ ٹرفرڈ اسٹیڈیم میں کھیلا جائے گا۔​
 

Zunaira_Gul

*GUL*
TM Star
May 16, 2017
2,476
1,655
363
شائقین کرکٹ کو دھچکا، پاک-بھارت میچ بارش سے متاثر ہونے کا خدشہ
113871


مانچسٹر: پاکستان اور بھارت کے شائقین کو بڑا دھچکا لگا ہے اور روایتی حریف پاکستان اور بھارت کا ورلڈکپ میں 16 جون کو ہونےوالا میچ بارش سے متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔

مانچسٹر کے اولڈ ٹریفورڈ اسٹیڈیم میں 16 جون کو پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں آمنے سامنے ہوں گی جس کا کرکٹ شائقین کو بے صبری سے انتظار ہے۔

میچ دیکھنے کے لیے دنیا بھر سے شائقین کی مانچسٹر آمد متوقع ہے اور کچھ مقامات پر ٹکٹ بلیک میں چار گنا اضافی قیمتوں میں فروخت ہو رہا ہے۔

تاہم شائقین کرکٹ کے لیے بری خبر یہ ہے کہ اس وقت مانچسٹر میں بارشوں کا سلسلہ جاری ہے اور برطانوی محکمہ موسمیات نے 16 جون کو بارش کی پیشگوئی کی ہے۔

مزید پڑھیں: 'بھارت کے خلاف میچ دباؤ کا حامل ہے، ہر حال میں جیتنا ہو گا'

برطانوی محکمہ موسمیات کے مطابق 16 جون کو مانچسٹر میں صبح 10 بجے سے بارش کے 50 فیصد امکانات ہیں۔

ایونٹ میں بھارت اب تک جنوبی افریقہ اور آسٹریلیا کے خلاف دو میچز میں کامیابی حاصل کرچکا ہے جبکہ پاکستان نے انگلینڈ کو شکست دے کر واحد فتح حاصل کی اور دونوں ٹیموں کا ایک ایک میچ پہلے ہی بارش کی نذر ہو چکا ہے۔

اگر پاکستان اور بھارت کے درمیان میچ بارش کی نذر ہوتا ہے تو یہ پہلا میچ ہو گا جب پاکستانی ٹیم کو عالمی کپ میں بھارت کے ہاتھوں میچ میں شکست نہیں ہوگی۔

اس سے قبل پاکستان اور بھارت کی ٹیمیں ورلڈکپ میں 6 مرتبہ مدمقابل آ چکی ہیں اور ان تمام مقابلوں میں فتح نے بھارتی ٹیم کے قدم چومے۔​
 
Top
Forgot your password?