ورلڈ کپ میں پاکستانی فیلڈنگ کا معیار انتہائی ناقص رہا،شاہد آفریدی

intelligent086

TM Star
Nov 10, 2010
1,822
1,735
1,313
Lahore,Pakistan
ورلڈ کپ میں پاکستانی فیلڈنگ کا معیار انتہائی ناقص رہا،شاہد آفریدی


بیٹنگ اور بالنگ بھی کبھی اوسط اور بعض اوقات اوسط سے بھی کمتر ثابت ہوئی،آل راؤنڈر
کراچی(اسپورٹس ڈیسک)سابق قومی کپتان اور اپنے دور کے نمایاں آل راؤنڈر شاہد آفریدی نے ورلڈ کپ میں پاکستانی فیلڈنگ کے معیار کو ناقص قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ گرین شرٹس کی بیٹنگ اور بالنگ بھی کبھی اوسط اور بعض اوقات اوسط سے بھی کمتر ثابت ہوئی جس کی وجہ سے اسے عالمی کپ کے سیمی فائنل میں جگہ نہیں مل سکی۔ واضح رہے کہ پاکستانی ٹیم نے جنوبی افریقہ کیخلاف چھ کیچز ڈراپ کرنے کے باوجود 49 رنز سے کامیابی حاصل کی تھی۔ان کا کہنا تھا کہ اگر پاکستانی ٹیم کا میگا ایونٹ میں سری لنکا کیخلاف میچ بارش کی نذر نہ ہوتا تو اس کیلئے لاسٹ فور مرحلے میں پہنچنا ممکن ہو جاتا کیونکہ اس صورت میں کمتر پوائنٹس کی مالک نیوزی لینڈ کی ٹیم صرف بہتر رن ریٹ کے سہارے سیمی فائنل میں جگہ بنانے میں کامیاب نہ ہوتی۔شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ ایونٹ کے آغاز میں ویسٹ انڈیز کیخلاف ذلت آمیز شکست کے بعد گرین شرٹس نے ٹورنامنٹ کی فیورٹ سائیڈ انگلینڈ کیخلاف زبردست کم بیک کیا لیکن بارش کی وجہ سے جو نقصان سری لنکا کیخلاف ہوا اس کی آخر تک تلافی نہیں ہو سکی کیونکہ پاکستانی ٹیم آئی لینڈرز کو آسانی سے ہرا سکتی تھی جس کا اندازہ بعد میں چار لگاتار کامیابیوں سے باآسانی لگایا جا سکتا ہے ۔شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ یہ محض قسمت کی بات ہے کہ جن دو ٹیموں کو پاکستان نے ابتدائی راؤنڈ میں شکست سے دوچار کیا وہ لارڈز میں فائنل کھیلیں گی۔


 

Seemab_khan

ღ ƮɨƮŁɨɨɨ ღ
Moderator
Dec 7, 2012
7,443
5,252
1,113
✮hმΓἶρυΓ, ρმκἶჰནმῆ✮
ورلڈ کپ میں پاکستانی فیلڈنگ کا معیار انتہائی ناقص رہا،شاہد آفریدی


بیٹنگ اور بالنگ بھی کبھی اوسط اور بعض اوقات اوسط سے بھی کمتر ثابت ہوئی،آل راؤنڈر
کراچی(اسپورٹس ڈیسک)سابق قومی کپتان اور اپنے دور کے نمایاں آل راؤنڈر شاہد آفریدی نے ورلڈ کپ میں پاکستانی فیلڈنگ کے معیار کو ناقص قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ گرین شرٹس کی بیٹنگ اور بالنگ بھی کبھی اوسط اور بعض اوقات اوسط سے بھی کمتر ثابت ہوئی جس کی وجہ سے اسے عالمی کپ کے سیمی فائنل میں جگہ نہیں مل سکی۔ واضح رہے کہ پاکستانی ٹیم نے جنوبی افریقہ کیخلاف چھ کیچز ڈراپ کرنے کے باوجود 49 رنز سے کامیابی حاصل کی تھی۔ان کا کہنا تھا کہ اگر پاکستانی ٹیم کا میگا ایونٹ میں سری لنکا کیخلاف میچ بارش کی نذر نہ ہوتا تو اس کیلئے لاسٹ فور مرحلے میں پہنچنا ممکن ہو جاتا کیونکہ اس صورت میں کمتر پوائنٹس کی مالک نیوزی لینڈ کی ٹیم صرف بہتر رن ریٹ کے سہارے سیمی فائنل میں جگہ بنانے میں کامیاب نہ ہوتی۔شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ ایونٹ کے آغاز میں ویسٹ انڈیز کیخلاف ذلت آمیز شکست کے بعد گرین شرٹس نے ٹورنامنٹ کی فیورٹ سائیڈ انگلینڈ کیخلاف زبردست کم بیک کیا لیکن بارش کی وجہ سے جو نقصان سری لنکا کیخلاف ہوا اس کی آخر تک تلافی نہیں ہو سکی کیونکہ پاکستانی ٹیم آئی لینڈرز کو آسانی سے ہرا سکتی تھی جس کا اندازہ بعد میں چار لگاتار کامیابیوں سے باآسانی لگایا جا سکتا ہے ۔شاہد آفریدی کا کہنا تھا کہ یہ محض قسمت کی بات ہے کہ جن دو ٹیموں کو پاکستان نے ابتدائی راؤنڈ میں شکست سے دوچار کیا وہ لارڈز میں فائنل کھیلیں گی۔



fielding tou cricket st door door tk taluq na rkhny waly ko b nazar aa rhi thi k kitni kharab hyy,,,,, /:) same batting bhi..
 
Top
Forgot your password?