خاتون نے جب قبر سے مردے کو نکال کر شادی کی

intelligent086

Super Star
Nov 10, 2010
7,571
7,587
1,313
Lahore,Pakistan
خاتون نے جب قبر سے مردے کو نکال کر شادی کی


لندن: (ویب ڈیسک) برطانیہ میں ایک خاتون نے قبر سے مردے کو نکال کر شادی کی اور بعد میں اس کی تدفین بھی کر دی۔ یہ خبر سوشل میڈیا سمیت ہر طرف وائرل ہو گئی ہے جس نے سب کو حیران کر دیا ہے۔

برطانوی میڈیا کے مطابق دنیا کو حیران کر دینے والی خبر برطانیہ سے موصول ہوئی ہے جس میں کوئی سوچ سکتا ہے کہ ایک خاتون کسی لاش سے شادی کر لے اور وہ بھی اپنی مرضی سے اور اس لاش کی بعد میں تدفین بھی کر دے۔

خبر رساں ادارے کے مطابق جون 1666 کا ذکر ہے جب ڈورتھی فورڈ کی منگنی ولیم سٹریٹ نامی شخص سے ہوئی جو کہ ایک چرچ میں پادری تھا۔ برطانوی کاﺅنٹی ڈیون سے تعلق رکھنے والے ولیم شادی کیلئے بھرپور تیاری کر رہے تھے مگر پہلے ایک المناک واقعہ پیش آیا۔

برطانوی میڈیا کے مطابق شادی سے چند دن پہلے ولیم سٹریٹ حادثے میں چل بسا اور شادی کی جگہ اس کی تدفین عمل میں آئی، مگر کہانی یہاں ختم نہیں ہوتی۔ درحقیقت موت کے بعد ڈورتھی فورڈ کے دوستوں نے روزانہ ایک بھیانک خواب دیکھنے کی شکایت کرنا شروع کی جو بار بار نظر آرہا تھا۔

اس خواب میں ولیم سٹریٹ ان لوگوں کے سامنے آتا اور کہتا جب تک ڈورتھی سے اس کی شادی نہیں ہوتی، اسے چین نہیں ملے گا۔ ڈورتھی کو اتنا متاثر کیا کہ اپنے منگیتر کی خواہش کو پورا کرنے کے لیے تیار ہو گئی۔

نومبر 1667 میں ولیم کی لاش کا قبر سے نکالا گیا اور تابوت کو چرچ میں لاکر ڈورتھی کے برابر میں کھڑا کردیا گیا۔ وہاں ڈورتھی نے شادی کی رسومات ادا کیں اور اس طرح واحد انگلش خاتون بن گئیں جس نے ایک مردے سے شادی کی۔ اس کے بعد ولیم سٹریٹ کو دوبارہ دفن کر دیا گیا اور پھر کسی کو بھی وہ دوبارہ خوابوں میں نظر نہیں آیا۔


 
  • Like
Reactions: maria_1
Top
Forgot your password?